آج رات ہفتہ وار مدنی مذاکرے کا انعقاد کیا جائیگا، امیر اہل سنت مدنی پھول ارشاد فرمائیں گے

عاشقانِ رسول کو علم دین کی جستجو دلانے، معاشرتی حوالے سے تربیت کرنے اور ان کے قلوب کو خوفِ خدا و عشق رسول اور محبتِ صحابہ و اولیاء کرام سے روشن کرنے کے لئے آج رات عالمی مدنی مرکز فیضان مدینہ کراچی میں ہفتہ وار مدنی مذاکرے کا انعقاد کیا جائیگا۔

اس مدنی مذاکرے میں بانی دعوت اسلامی حضرت علامہ محمد الیاس عطار قادری دامت بَرَکَاتُہمُ العالیہ بیرونِ ملک سے بذریعہ ویڈیو لنک مدنی پھول ارشار فرماتے ہوئے عاشقان رسول کی جانب سے ہونے والے سوالات کے جوابات ارشاد فرمائیں گے۔ اس پروگرام کو مدنی چینل پر بھی براہ راست نشر کیا جائیگا۔

تمام عاشقان رسول سے اس مدنی مذاکرے میں شرکت کرنے کی درخواست ہے۔


18رجب المرجب 1443ھ بمطابق 19فروری 2022ء کو عالمی مدنی مرکز فیضان مدینہ کراچی میں ہفتہ وار مدنی مذاکرے کا انعقاد کیا گیا جس میں عاشقان رسول کی بڑی تعداد شریک ہوئی۔

مدنی مذاکرے میں شیخ طریقت، امیر اہلسنت علامہ محمد الیاس عطار قادری دامت بَرَکَاتُہمُ العالیہ نے عاشقان رسول کی جانب سے ہونے والے سوالات کے بیرونِ ملک سے آن لائن مدنی چینل کے ذریعے جوابات دیئے اور مدنی پھول ارشاد فرمائے۔

مدنی مذاکرے چند مدنی پھول ملاحظہ کیجئے:

سوال: بزرگوں کو ایصالِ ثواب کرنے کا کیا فائدہ ہوتا ہے؟

جواب: جسے تحفہ دیا جائے وہ خوش ہوتاہے ،جوفوت ہوجاتاہے اس کے لیے تحفہ ایصالِ ثواب ہے ،جب بزرگانِ دین کو ایصالِ ثواب کیا جائے گا تو وہ خوش ہوں گے ، ہماری طرف ان کی توجہ ہو گی،ہمیں دنیا وآخرت میں اس کی برکتیں ملیں گی،یہ کارِ ثواب ہے ،عام لوگوں کوفوت ہونے والے دن سالانہ ایصالِ ثواب کیا جائے تو فاتحہ وبرسی کہتے ہیں ،بزرگوں کے یوم وصال کو ایصالِ ثواب کرتے ہیں تو عرس کہاجاتاہے ۔ ایصالِ ثواب قرآن وحدیث سے ثابت ہے۔

سوال: سکون کی بہترین دواکیا ہے ؟

جواب: بے شک اللہ پاک کا ذِکر ہی دلوں کے اطمینان کا ذریعہ ہے ،مادی دوا کے لیے ڈاکٹرسے رابطہ کیاجائے ۔

پارہ 13،سُورۂ رعد کی آیت نمبر28میں ارشاد ہوتاہے"اَلَا بِذِكْرِ اللّٰهِ تَطْمَىٕنُّ الْقُلُوْبُترجمۂ کنزالعرفان:سُن لو! اللہ کی یاد ہی سے دل چین پاتے ہیں۔

سوال: رات کے سنّاٹے میں قبرستان جانا کیسا؟

جواب: عام طور پر سنّاٹے میں وحشت وگھبراہٹ ہوتی ہے اورقبرستان میں تو اور زیادہ ہوتی ہے ۔اس لیے رات کے سنّاٹے میں قبرستان نہیں جانا چاہئے ۔

سوال: بزرگانِ دین سےزیادہ عشق ہونا کیسا؟

جواب: بزرگانِ دین اوردینی چیزوں سے زیادہ عشق ہونا اچھی بات ہے جب تک شریعت سے نہ ٹکرائے ۔

سوال: کیا بُروں کے ساتھ بُرائی سے پیش آنا چاہئے؟

جواب: جی نہیں !بُرائی کا جواب بُرائی سے دینا ہماراکام نہیں ،بعض اوقات بُرائی کا بدلہ لینے جائیں تو بندہ ظالم بن جاتاہے ،ہم دعوت ِاسلامی والوں کو نیکوں کے ساتھ نیک اوربدمعاشوں کے ساتھ بھی نیک برتاؤ کرنا ہے۔ پارہ 18،سُورۂ مؤمنون کی آیت نمبر96میں ارشاد ہوتاہے اِدْفَعْ بِالَّتِیْ هِیَ اَحْسَنُ السَّیِّئَةَ ۔ ترجمۂ کنزالعرفان:سب سے اچھی بھلائی سے بُرائی کو دفع کرو۔

سوال: یا اللہ پاک اوراُس کے رسول صلی اللہ علیہ واٰلہ وسلم کو راضی کرنا ضروری ہے ؟

جواب: جی ہاں ! اللہ پاک اوراُس کے پیارے رسول صلی اللہ علیہ واٰلہ وسلم کو راضی کرنا ہرمسلمان پر لازم ہے ۔

سوال: اِس ہفتے کارِسالہ ” امیر ہل سُنّت سے شاعری کے بارے میں سوال جواب “ پڑھنے یاسُننے والوں کوجانشینِ امیرِاہلِ ِسُنّت دامت برکاتہم العالیہ نے کیا دُعا دی ؟

جواب: یااللہ پاک! جو کوئی 17 صفحات کا رسالہ ” امیر ہل سُنّت سے شاعری کے بارے میں سوال جواب“ پڑھ یا سُن لے اسے فضولیات سے بچاکر اپنے ربّ اور اپنے محبوب صلَّی اللہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم کے ذِکر میں مشغول رہنے والی زبان عطا فرما۔ اٰمِیْن بِجَاہِ خاتم النَّبیّن صلَّی اللہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم ۔


11رجب المرجب 1443ھ بمطابق 12فروری 2022ء کو عالمی مدنی مرکز فیضان مدینہ کراچی میں ہفتہ وار مدنی مذاکرے کا انعقاد کیا گیا جس میں شہر کراچی اور بیرون شہر سے عاشقان رسول کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔

مدنی مذاکرے میں شیخ طریقت، امیر اہلسنت علامہ محمد الیاس عطار قادری دامت بَرَکَاتُہمُ العالیہ نے عاشقان رسول کی جانب سے ہونے والے سوالات کے بیرونِ ملک سے آن لائن مدنی چینل کے ذریعے جوابات دیئے اور مدنی پھول ارشاد فرمائے۔

مدنی مذاکرے چند مدنی پھول ملاحظہ کیجئے:

سوال: خوشامد وچاپلوسی کے بارے میں آپ کیا فرماتے ہیں ؟

جواب :آجکل ہمارے معاشرے میں ملازم سیٹھ کی ،کم عہدے والابڑے عہدے والے کی ،غریب امیرکی خوشامدکرتاہے ،عموماًاس میں جھوٹ ہوتاہے ،ڈرپوک کو شیر،کنجوس کو سخی ،فاسق کو اچھا ،جمعہ کی نمازبھی نہ پڑھنے والے اورظلم کرنے والے کی تعریفیں کی جارہی ہوتی ہیں ،بعض اوقات ضمیربھی ملامت کررہا ہوتا ہوگا مگرپھر بھی لوگ ایساکررہے ہوتے ہیں ،خوشامدکرنا مؤمن کے اخلاق سے نہیں ،فرمانِ مصطفی صلی اللہ علیہ والہ وسلم ہے:جب فاسق کی تعریف کی جاتی ہے تواللہ پاک غضب فرماتا(یعنی ناراض ہوتا)ہے۔ (شعب الایمان ،4/230، حدیث،4885) البتہ حوصلہ افزائی کے لیےدرست تعریف کی جاسکتی ہے۔

سوال:13اور15رجب میں کیا اہم بات ہے ؟

جواب: 13رجب اسلام کے چوتھے خلیفہ،امیر المومنین حضرت مولیٰ علی مشکل کشا رضی اللہ عنہ کا یوم ِولادت اور15رجب حضرت امام جعفرصادق رحمۃ اللہ علیہ کا یومِ عرس ہے ۔

سوال:پہلے کے بزرگ صاحبِ علم تھے ،انہیں علم یادرہتاتھا مگرآجکل علم حاصل کرنا پہلے کے دورسے آسان ہے مگرعلم یادنہیں رہتا۔اگرکوئی پہلے کے بزرگانِ دین جیسابنناچاہے تو کیا کرے ؟

جواب : پہلے کے بزرگانِ دین کے حافظے بہت مضبوط ہوتے تھے ،چلتے چلتے بھی مطالعہ کرلیتے تھے ،اپنے ہاتھ سے کتابیں لکھتے تھے ،ان کے ہاتھ سے لکھی ہوئی کتاب کومخطوطہ کہا جاتا ہے ،یہ علم کی باتوں کوہی سنا کرتے تھے ،ایک بزرگ کے بارے میں ہے کہ جب لوگوں کی باتیں ان کے کان میں پڑتیں تو کان بندکرلیتے تھے کہ کہیں لوگوں کی بداخلاقی والی باتیں یاد نہ ہو جائیں ،آجکل اخلاق بہت خراب ہیں بالخصوص گھر میں ہونے والی گفتگومیں کُھردراپن زیادہ ہوتاہے،بہرحال ہرشے کی زکوٰۃ ہوتی ہے علم کی زکوٰۃ علم پر عمل کرنا ہے ،جو علم پر عمل کرتاہے تو اس میں برکت ہوتی ہے ،اسی طرح علم نورہےاور یہ اس کے پاس نہیں رہتاجو علم پر عمل نہیں کرتا۔

سوال: توکل یعنی اللہ پاک پر بھروسا کیسے پیداہو،توکل نہ ہونے کی وجہ سے کئی برائیاں سرزد ہوجاتی ہیں ؟

جواب: توکل کا معنیٰ ہے اسباب پربھروسا کرنے کے بجائے اللہ پاک پر بھروساکیا جائے ۔اللہ پاک پر توکل کرنا فرضِ عین ہے ،توکل کے بغیرتوچارہ ہی نہیں ہے۔اگریہ ذہن بن جائے گا کہ روزی دینا اللہ پاک نے اپنے ذمہ ٔ کر م پر لیا ہوا ہے، بندہ جتنا زندہ رہے گا اسے روزی ملے گی ،پرندوں پر غورکرےکہ پرندے صبح خالی پیٹ نکلتے ہیں اورواپس پیٹ بھرکر آتے ہیں ،یہ کل کے لیے کچھ نہیں بچاکررکھتے ،آجکل تو لوگ اپنا مال بڑھانے کے بارے میں سوچتے رہتے ہیں مگرنیکیاں بڑھیں اس کے بارے میں نہیں سوچا جاتا،جبکہ نیکیاں بڑھنے سے جنت میں درجے بڑھتے ہیں ۔ مکتبۃ المدینہ کی کتاب ’’توکل ‘اورنجات دلانے والے اعمال “میں توکل کے باب کا مطالعہ کیجئے ۔

سوال: کون سی مخلوق کل یااس کے بعد کے لیے خوراک بچاکررکھتی ہے ؟

جواب :  صرف انسان ،چیونٹی اورچوہا ہی خوراک بچاکررکھتے ہیں۔

سوال : افضل ترین عبادت کونسی ہے ؟

جواب:علمِ دین میں غورکرنا افضل ترین عبادت ہے،اسی طرح آخرت کے بارے میں غوروفکر کرنا بھی اچھا ہے۔حدیث پاک میں ہے : گھڑی بھرغوروفکرکرنا60 سال کی عبادت سے بہترہے ۔ (جامع صغیرللسیوطی،ص365 )

سوال: جس نے مرتے وقت کلمہ پڑھا،اس کے بارے میں آپ کیا فرماتے ہیں ؟

جواب: مرتے وقت کلمہ شریف پڑھنے کی توفیق مل جانا ، بہت بڑی سعادت ہے ،فرمانِ مصطفی صلی اللہ علیہ والہ وسلم ہے : مَنْ كَانَ آخِرُ كَلَامِهِ لَاۤ اِلٰهَ اِلَّا اللَّهُ دَخَلَ الْجَنَّةَ یعنی جس کا آخری کلمہ لَاۤ اِلٰهَ اِلَّا اللَّهُ ہو،وہ جنت میں جائےگا۔ ( أبو داود،حدیث ، 3116 )

سوال: رمضان شریف آنے والاہے، اعتکا ف کی بھی بہاریں ہوں گی ،آپ کیا فرماتے ہیں ؟

جواب: ماہِ رمضان کا سنتاہوں کہ آنے والاہے تو دل جھوم جاتاہے ،رمضان اعتکا ف کا سُن کرتو مزے کو بھی مزہ آجاتاہے ۔

سوال: کیا رنگوں کے بھی اثرات ہوتے ہیں؟

جواب: سبزہ یاسبزرنگ(Green Color) دیکھنے سے نظرتیز ہوتی ہے، حضرتِ سَیِّدُناامام شافعی رحمۃ اللہ علیہ  فرماتے ہیں:4چیزیں آنکھوں کی (بینائی کی)تقویَّت کاباعِث ہیں (1)قبلہ رُخ بیٹھنا(2)سوتے وقت سُرمہ لگانا (3)سبزے کی طرف نظر کرنا اور(4)لباس کو پاک و صاف رکھنا۔ (احیاء العلوم،ج2، ص27)

کالے رنگ کے جوتے سے غم زیادہ ہوتے ہیں ،یہ کہنا کہ فلاں رنگ کے لباس پہننے سے مصیبتیں آتی ہیں یہ غلط ہے ۔اپنی اپنی پسند ہوتی ہے مجھے سفیدرنگ پسندہے،اس میں مزہ آتاہے کہ نبیِ کریم صلی اللہ علیہ والہ وسلم نے اکثرسفیدرنگ استعمال فرمایا ،دعوتِ اسلامی میں سفیدیا لائٹ کلرکالباس پہننے کی ترغیب ہے ۔

سوال: دِینی رسائل تقسیم کرنے کے کیافوائد ہیں ؟

جواب: دِینی رسالے تقسیم کرنے چاہئیں ،کئی ایسے ہوں گے کہ جو کوئی رسالہ پڑھ کر گناہوں سے تائب ہوئے ہوں گےاوردعوت اسلامی کے دینی ماحول میں آگئے ہوں گے ۔تمام کاروباری اوردیگرشعبوں والوں کو چاہئے کہ مکتبۃ المدینہ کے رسائل تقسیم کریں ،دعوتِ اسلامی کے شعبے تقسیمِ رسائل سے رابطہ کرکے صحابہ واولیا اوراپنے مرحومین کے ایصال ِثواب کے لیے رسائل تقسیم کریں ،رشتہ داروں کی برسی وغیرہ کے مواقع پر رسائل تقسیم کریں ،خوشی وغمی کے مواقع پرمکتبۃ المدینہ کے بستے(Stall) لگوائیں ۔

سوال: اِس ہفتے کارِسالہ ” فیضانِ امام جعفر صادِق “ پڑھنے یاسُننے والوں کو امیرِاہلِ ِسُنّت دامت برکاتہم العالیہ نے کیا دُعا دی ؟

جواب: یاربَّ المصطفٰے! جو کوئی 21 صفحات کا رسالہ ”فیضانِ امام جعفر صادِق “پڑھ یا سُن لے اُسے تمام صحابہ و اہلِ بیت کا سچا غلام بنااور اسے امام جعفر صادق کے پیارے پیارے نانا جان صلَّی اللہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم کی قیامت میں شفاعت نصیب فرما۔ اٰمِیْن بِجَاہِ خاتم النَّبییّن صلَّی اللہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم۔


13 رجب المرجب کو اسلام کے چوتھے خلیفہ   امیر المؤمنین ، دامادِ رسول حضرت سیدنا مولا علی شیرِ خدا کرم اللہ وجہہ الکریم کا یومِ ولادت ہے۔ اسی مناسبت سے آج رات 14 فروری 2022ء ، 13 رجب المرجب 1443ھ کو جشن ولادت مولاعلی مشکل کشا رضی اللہُ عنہکے پُرمسرت موقع پر عالمی مدنی مرکز فیضان مدینہ کراچی میں سنتوں بھرے اجتماع کا انعقاد کیا جائیگا۔

اجتماع کا آغاز تلاوت قرآن مجید سے کیا جائیگا جبکہ نعت خواں اسلامی بھائی بارگاہ مصطفٰے صلَّی اللہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم میں ہدیۂ نعت پیش کرتے ہوئے مولا علی رضی اللہُ عنہ کی شان میں منقبتیں بھی پڑھیں گے۔ دوران اجتماع مرکزی مجلس شوریٰ کے نگران حاجی مولانا محمد عمران عطاری مُدَّ ظِلُّہُ العالی ”مولانا علی کی شان“ میں سنتوں بھرا بیان فرمائیں گے۔ بیان کے بعد مدنی مذاکرے کا سلسلہ بھی ہوگا جس میں شیخ طریقت امیر اہل سنت علامہ محمد الیاس عطار قادری دامت بَرَکَاتُہمُ العالیہ سیرت مولا علی رضی اللہُ عنہ پر گفتگو فرماتے ہوئے مدنی پھول ارشاد فرمائیں گے۔

اجتماع کے آغاز میں جلوس علویہ جبکہ اختتام پر لنگر علویہ کا بھی اہتمام کیا جائیگا۔


دعوت اسلامی کے زیر اہتمام ہر ہفتے پابندی کے ساتھ اور بعض مہینوں میں ایونٹس کی مناسبت سے  6دن، 10دن، 11 اور 12 دن تک مدنی مذاکرے کا سلسلہ ہوتا ہے جس میں کثیر تعداد میں عاشقان رسول شریک ہوتے ہیں۔ ان مدنی مذاکروں میں شیخ طریقت امیر اہلسنت علامہ محمد الیاس عطار قادری دامت بَرَکَاتُہمُ العالیہشرعی، تنظیمی، اخلاقی، طبی اور معاشرتی اعتبار سے عاشقان رسول کی رہنمائی فرماتے ہیں۔

ہر ہفتے کی طرح آج بھی 12 فروری 2022ء بعد نماز عشاء عالمی مدنی مرکز فیضان مدینہ کراچی سے براہ راست مدنی چینل پر مدنی مذاکرے کا انعقاد کیا جائیگا۔ مدنی مذاکرے میں امیراہلسنت دامت بَرَکَاتُہمُ العالیہ شرعی مسائل کے حوالے سے گفتگو فرماتے ہوئے عاشقان رسول کی رہنمائی فرمائیں گے۔

تمام عاشقان رسول سے اس مدنی مذاکرے میں شرکت کرنے کی درخواست ہے۔ 


اَلَاۤ اِنَّ اَوْلِیَآءَ اللّٰهِ لَا خَوْفٌ عَلَیْهِمْ وَ لَا هُمْ یَحْزَنُوْنَۚۖ(۶۲)الَّذِیْنَ اٰمَنُوْا وَ كَانُوْا یَتَّقُوْنَؕ(۶۳)

ترجمہ کنز الایمان: سن لو بےشک اللہ کے ولیوں پر نہ کچھ خو ف ہے نہ کچھ غم، وہ جو ایمان لائے اور پرہیزگاری کرتے ہیں۔ (سورہ یونس، آیت 62، 63)

ماہ رجب المرجب 1443ھ کا عنقریب آغاز ہونے والا ہے۔ ہجری سال میں یہ ماہ بہت اہمیت کا حامل ہے کیونکہ ماہ رجب کی جہاں بہت ساری خصوصیات ہے اس کی ایک خوبی یہ بھی ہے یہ ماہ ہمیں رمضان المبارک سے مزید قریب کردیتا ہے۔

اس ماہ میں جہاں بہت سے اللہ پاک کے برگزیدہ بندوں کا یوم پیدائش و یوم وفات ہے وہاں اولیائے کرام میں ایک بڑا نام سلطان الہند، آقائے چشت، حضرت سیدنا خواجہ معین الدین حسن سنجری اجمیری چشتی (المعروف حضرت خواجہ غریب نواز) رحمۃ اللہ علیہ کا بھی ہے جن کا عرس دنیا بھر میں ہر سال رجب المرجب کے مہینے میں نہایت مذہبی عقیدت واحترام سے منایا جاتا ہے۔

فیضان اولیاء، دنیائے اسلام کی عالمگیر تحریک دعوت اسلامی بھی اولیائے کرام کے اعراس منانے میں سر فہرست ہے۔ حضرت خواجہ غریب رحمۃ اللہ علیہ کے 810 ویں عرس کے موقع پر 2 فروری 2022ء سے رجب شریف کی چھٹی رات تک مدنی مذاکرے کا انعقاد کیا جائیگا جو کہ مدنی چینل پر براہ راست نشر ہوگا۔

ان مدنی مذاکروں کے آغاز میں جلوس غریب نواز کا اہتمام ہوگا، نعت خواں حضرات بارگاہِ رسالت صلَّی اللہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم میں ہدیۂ نعت پیش کرنے کے ساتھ ساتھ منقبت غریب نواز پڑھیں گے۔ مدنی مذاکروں میں امیراہلسنت علامہ محمد الیاس عطار قادری دامت بَرَکَاتُہمُ العالیہ سیرت خواجہ غریب نواز رحمۃ اللہ علیہ اور دینی خدمات بیان کرنے کے علاوہ اعراس منانے کے حوالے سے عاشقان رسول کی شرعی رہنمائی فرمائیں گے۔

اولیائے کرام کی محبت کو اپنے دلوں میں اجاگر کرنے کے لئے تمام عاشقان رسول کو ان مدنی مذاکروں میں شرکت کرنے کی دعوت دی جاتی ہے۔


18جماد الثانی 1443ھ بمطابق 22 جنوری 2022ء کو عالمی مدنی مرکز فیضان مدینہ کراچی میں ہفتہ وار مدنی مذاکرے کا انعقاد کیا گیا جس میں شہر کراچی اور بیرون شہر سے عاشقان رسول نے کثیر تعداد میں شرکت کی۔

مدنی مذاکرے میں شیخ طریقت، امیر اہلسنت علامہ محمد الیاس عطار قادری دامت بَرَکَاتُہمُ العالیہ نے عاشقان رسول کی جانب سے ہونے والے سوالات کے جوابات دیئے اور مدنی پھول ارشاد فرمائے۔

مدنی مذاکرے چند مدنی پھول ملاحظہ کیجئے:

سوال : عام مؤمن اورمؤمنِ کامل میں کیا فرق ہے ؟

جواب : ایمان کے مختلف درجے ہیں، فرمانِ مصطفےٰ صلَّی اللہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم ہے: جو خود پیٹ بھرکرسوئے اور اس کاپڑوسی بھوکا ہو وہ مؤمن کامل نہيں۔ (معجمِ کبیر،ج 12،ص119، حدیث: 12741)

اِس لیے ہراُس عمل سے بچناچاہئے جس سے ایمان میں کوئی کمزوری آئے ۔

سوال: تکبرسے کیا مرادہے اورتکبرکرنے والوں کاکیا عذاب ہے ؟

جواب: اگرکوئی اپنے آپ کو دوسرے سے افضل سمجھے تویہ تکبرہے ۔رسول اللہ صلی اللہ علیہ والہ وسلم نے فرمایا :متکبرین کا حشرقیامت کے دن چیونٹیوں کے برابرجسموں میں ہوگا اوران کی صورتیں آدمیوں کی ہوں گی ،ہرطرف سے ان پر ذِلّت چھائےہوئے ہوگی ،ان کو کھینچ کرجہنم کے قیدخانے کی طرف لے جایا جائے گا۔جس کا نام بُولس ہے۔ان کے اوپرآگوں کی آگ ہوگی ،اُنہیں جہنمیوں کا نچوڑ پلایا جائے گا جس کوطِیْنَۃُ الْخَبَال کہتے ہیں ۔ (ترمذی،4/221،حدیث :2500)

(تکبر کی تباہ کاریوں ،اس کی علامات اوراس کا علاج جاننے کے لیے مکتبۃ المدینہ کی کتابتکَبُّر“کا مطالعہ بے حد مفید رہے گا۔ان شاۤء اللہُ الکریم)

Download

سوال: آندھی اورتنگ دستی کا اندیشہ ہوتو کون ساوظیفہ پڑھناچاہئے ؟

جواب :چلتے پھرتےوضوبے وضو’’ یَاوَکِیْلُ ‘‘پڑھتےرہیں ،حاجتیں پوری ہوں گی ،مصیبتیں حل ہوں گی ، رزق اوربھلائی کے دروازے کھلیں گے۔

سوال: جب نبیِ کریم صلی اللہ علیہ والہ وسلم حضرت ابوبکرصدیق رضی اللہ عنہ کے ساتھ غارِثورمیں تھے تو وہاں کھاناکون لے کر جاتاتھا؟

جواب: حضرت ابوبکرصدیق رضی اللہ عنہ کی بیٹی حضرت اسماءرضی اللہ عنہا ۔

سوال: مکتبۃ المدینہ کی کتاب ’’با طنی بیماریوں کا علاج‘‘کے بارے میں آپ کیا فرماتے ہیں۔

جواب : ’’باطنی بیماریوں کا علاج‘‘ مکتبۃ المدینہ کی منفردکتاب ہے جو کئی فرض علوم پر مشتمل ہے ،سب کو اس کا مطالعہ کرنا چاہئے ۔

Download

سوال : کیا دل بدلتارہتاہے ؟

جواب: جی ہاں ! دل کو قلب کہتے ہیں یہ مُنقَلِب ہوتارہتاہے یعنی بدلتارہتاہے ۔

سوال: اِس ہفتے کارِسالہ ” اقوالِ صدیقِ اکبر رضی اللہ عنہ “ پڑھنے یاسُننے والوں کو امیرِاہلِ ِسُنّت نے کیا دُعا دی ؟

جواب: یا ربَ المصطفےٰ! جو کوئی 17 صفحات کا رسالہ’’ اقوالِ صدیقِ اکبر رضی اللہ عنہ‘‘ پڑھ یا سن لے اُسے اور اُس کی نسلوں کو صحابہ و اہلِ بیت کی سچی غلامی نصیب فرما اور اسے عشقِ رسول کی لازوال دولت سے مالا مال فرما کر بےحساب بخش دے ۔ اٰمِیْن بِجَاہِ خاتمِ النَّبیّن صلَّی اللہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم ۔


عالمی مدنی مرکز فیضان مدینہ کراچی میں 15 جنوری 2022ء کو ہفتہ وار مدنی مذاکرے کا انعقاد کیا گیا جس میں کثیر عاشقان رسول فیضان مدینہ کراچی آکر براہ راست اور جبکہ دیگر مقامات پر اسلامی بھائیوں کی بڑی تعداد نے بذریعہ مدنی چینل شرکت کی۔

بانی دعوت اسلامی حضرت علامہ محمد الیاس عطار قادری دامت بَرَکَاتُہمُ العالیہ نے دینی و معاشرتی اعتبار سے شرکا کی تربیت کرتے ہوئے عاشقان رسول کی جانب سے ہونے والے سوالات کے جوابات دیئےاور مدنی پھول ارشاد فرمائے۔

مدنی مذاکرے چند مدنی پھول ملاحظہ کیجئے:

سوال:ایک مسلمان کو کتنا علمِ دین ہونا چاہیے؟

جواب:حدیث پاک میں ہے کہ علم حاصل کرنا ہر مسلمان پر فرض ہے۔ (سنن ابن ماجہ1/146)

اس سے مراد ضروری صحیح عقائد، دیگر علوم مثلاً نماز کا فرض ہونا، روزے ، حج، زکوٰة وغیرہ کےضروری مسائل اوران کی ادائیگی کے طریقے کا علم ہونا ضروری ہے،اسی طرح تاجر کے لیے تجارت کے ضروری مسائل،و علیٰ ھذا القیاس

ظاہری گناہوں اور باطنی امراض کے بارے میں بھی معلومات ہونی چاہئیں۔

سوال:کوئی غیر ضروری سوال کرے تو اس کو کیا جواب دیا جائے؟

جواب:گناہ والی بات نہ ہو تو سچ سچ بتادیا جائے،اگر بات بتا نے والی نہ ہوتو یہ کہہ دیا جائے:" معاف کردیجئے میں نہیں بتاسکتا"۔ بہرحال فضول اور غیر ضروری سوالات کرنے والے کی اصلاح ہونی چاہئےتا کہ وہ اس طرح کے سوالات ہی نہ کرے ۔

سوال:کیا یہ درست ہے کہ دائیں ہا تھ (Right Hand)میں خارِش ہو تو دولت آتی ہے اوربائیں ہاتھ(Left Hand) میں ہوتو دولت جاتی ہے ؟

جواب :ایسی کوئی بات نہیں ۔

سوال:صدیق اکبر کا کیا معنیٰ ہے۔

جواب : صدیق کا معنی ہے ’’سچا‘‘اور اکبر کا معنی ہے" سب سے بڑا"،یہ مسلمانوں کے پہلے خلیفہ ،صحابیِ رسول حضرت ابوبکر صدیق رضی اللہ عنہ کا لقب ہے۔

سوال:کیا بال سفید ہوجائیں توبندہ بوڑھا ہوجاتا ہے؟

جواب: نہیں،ایسا نہیں ہے! بال بیماری کی وجہ سے بھی سفید ہوجاتے ہیں’’ بوڑھے‘‘ کی تعریف یہ ہے کہ بندہ 60سال کا ہوجائے تو مکمل بوڑھاہوجاتاہے۔

سوال:موت کے تذکرے کوبعض لوگ سنجیدہ نہیں لیتےیا اس کو پسند نہیں کرتے، اس کی کیا وجوہات ہیں؟

جواب : یہ نفس اور شیطان کا دھوکہ ہے،لوگ مرنے کے لیے تیار نہیں ہیں، یہ مانتے ہیں کہ موت نے آنا ہے مگر کام ایسے ہیں کہ جیسے مرنا ہی نہیں۔

سوال:جب ہم لوگوں کے ساتھ ہوں تواس وقت کیا احتیاط کرنی چاہئے ؟

جواب:ایسے کاموں سے بچا جائے جس سے لوگوں کو گِھن آتی ہے، مثلاً بار بار ناک میں اُنگلی ڈالنا، بدن سے میل اُتارناوغیرہ۔

سوال:مہمان کے ساتھ کیسا سلوک کرنا چاہئے؟

جواب :مہمان آتا ہے تو اپنا رزق ساتھ لاتا ہے اور جاتا ہے تو میزبان کے گناہوں کی مغفرت کا باعث بنتا ہے، مہمان آئے تو خوش دلی سے پیش آنا چاہیے، مہمان کو مان دیا جائے، مہمان کے مرتبے کے مطابق سلوک ہونا چاہئے، ایسی کوئی حرکت نہ کریں جس سے مہمان کی دل آزاری ہو، مہمان کو چاہیے کہ مروت و حیا کو پیش نظر رکھے اور کھانے کے اوقات میں نہ جائے۔

سوال: اِس ہفتے کارِسالہ ” بُخار کے فضائل “ پڑھنے یاسُننے والوں کو امیرِاہلِ ِسُنّت نے کیا دُعا دی ؟

جواب: یاربَّ المصطفٰے! جو کوئی 21 صفحات کا رسالہ ”بُخار کے فضائل“ پڑھ یا سُن لے اُسے بیماری میں شکوہ و شکایت کرنے سے بچا کر اپنی رضا پر راضی رہنے کی توفیق عطا فرمااور اُسے بے حساب بخش دے۔ اٰمِیْن بِجَاہِ خاتمِ النَّبیّن صلَّی اللہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم ۔


فرمان مصطفٰے صلَّی اللہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم: علم سیکھنے سے ہی آتا ہے اور فقہ غور و فکر سے حاصل ہوتی ہےاور اللہ عزوجل جس کے ساتھ بھلائی کا ارادہ فرماتا ہے اسے دین میں سمجھ بوجھ عطا فرماتا ہے اور اللہ عزوجل سے اس کے بندوں میں وہی ڈرتے ہیں جو علم والے ہیں۔ (المعجم الکبیر، الحدیث: 7312، ج19، ص511)

حضرت سیدنا ابراہیم علیہ السلام سے ارشاد ہوا: اے ابراہیم ! میں علیم ہوں، ہر علیم کو دوست رکھتا ہوں، یعنی علم میری صفت ہےاور جو میری اس صفت(علم) پر ہے وہ میرا محبوب ہے۔ (جامع بیان العلم و فضلہ، ص70، حدیث 213)

دین اسلام کی عالمگیر تحریک دعوت اسلامی کے دینی ماحول میں بھی عاشقان رسول کو دینی تعلیم سے آراستہ ہونے کی ترغیب دلائی جاتی ہےاور مختلف ایونٹس کے ساتھ ساتھ ہر ہفتے پابندی کے ساتھ عالمی مدنی مرکز فیضان مدینہ کراچی میں مدنی مذاکرے کا انعقاد کیا جاتا ہے جس میں امیر اہلسنت علامہ محمد الیاس عطار قادری دامت بَرَکَاتُہمُ العالیہ دینی و معاشرتی اعتبار سے لوگوں کی اصلاح کرتے اور اسلامی بھائیوں کی جانب سے ہونے والے سوالات کے جوابات ارشاد فرماتے ہیں۔

ہر ہفتے کی طرح آج بھی بمطابق 22 جنوری 2022ء کو عالمی مدنی مرکز فیضان مدینہ کراچی سے براہ راست مدنی چینل پر ہفتہ وار مدنی مذاکرے کا انعقاد کیا جائیگا جس میں امیر اہلسنت علامہ محمد الیاس عطار قادری دامت بَرَکَاتُہمُ العالیہ مدنی پھول بیان کرنے کے ساتھ ساتھ عاشقان رسول کی جانب سے ہونے والے سوالات کے جوابات بھی ارشاد فرمائیں گے۔

تمام عاشقان رسول سے مدنی مذاکرے میں شریک ہوکر علمِ دین سیکھنے کی درخواست ہے۔


عالمی مدنی مرکز فیضان مدینہ کراچی میں 8 جنوری 2022ء کو ہفتہ وار مدنی مذاکرے کا انعقاد کیا گیا جس میں کثیر عاشقان رسول فیضان مدینہ کراچی آکر براہ راست اور جبکہ دیگر مقامات پر اسلامی بھائیوں کی بڑی تعداد نے بذریعہ مدنی چینل شرکت کی۔

بانی دعوت اسلامی حضرت علامہ محمد الیاس عطار قادری دامت بَرَکَاتُہمُ العالیہ نے دینی و معاشرتی اعتبار سے شرکا کی تربیت کرتے ہوئے عاشقان رسول کی جانب سے ہونے والے سوالات کے جوابات دیئےاور مدنی پھول ارشاد فرمائے۔

مدنی مذاکرے چند مدنی پھول ملاحظہ کیجئے:

سوال : بیمارکا علاج کس طرح کروایا جائے ؟

جواب : جہاں تک بن پڑے دواؤں(Medicine) کی طرف نہیں جانا چاہئے بلکہ غذا(سبزیوں ، پھلوں اور دیگر وغیرہ) سے علاج کرنا چاہیے، ماہرِغذائیت کے مشورے سے علاج کیا جائے ،بلکہ بیماری سے پہلے ہی اپنی غذاکو کنڑول کیاجائے ،کھانےپینے میں احتیاط کی جائے ،جو غذاجسم کے موافق نہیں وہ نہ کھائی جائے ،طبیب (Doctor)سےعلاج کروانا ہی پڑےتوماہرطبیب(Specialist Doctor) سے رابطہ کیا جائے، پھر ڈاکٹر کے بتانے کے مطابق ادویات کا مکمل اِستعمال کیا جائے۔

سوال: اپنے طورپر خودسے کوئی دوا(Medicine)استعمال کرنا یا کسی اورمریض کواپنی طرف سے کوئی میڈیسن استعمال کرنے کامشورہ دینا کیسا ؟

جواب: اپنے طورپرکوئی بھی علاج نہ کیا جائے اورنہ ہی کسی اوربیمارکو کوئی علاج بتایا جائے کیونکہ دواکےمضر اثرات(Side Effects) ہوتے ہیں ،ماہرطبیب کوچیک کرواکریا مشورہ کرکے ہی کوئی دوااستعمال کی جائے ۔

سوال: ایثارکیا ہےاوراس کا فائدہ کیا ہے ؟

جواب :جس چیزکی اپنے آپ کوحاجت ہو،وہ خود استعمال کرنے کے بجائے کسی دوسرے ضرورت مندکودےدینا ،اپنی ضرورت پر دوسرے کو ترجیح دینا ایثارکہلاتاہے ،ایثارکرنے والے کے لیے جنت کی خوشخبری ہے۔

نبیٔ رحمت،شفیعِ امت،قاسمِ نعمت صلَّی اللہ علیہ وآلہ وسلَّم نے ارشاد فرمایا: أیُّمَا رَجُلٍ إشْتَھٰی شَہْوَۃً فَرَدَّ شَہْوَتَہ، وَآثَرَ عَلٰی نَفْسِہٖ غُفِرَلَہٗ۔ ترجمہ: جو شخص کسی چیز کی خواہش رکھتاہو پھر اپنی خواہش ترک کر دے اور دو سرے کو اپنے اوپر تر جیح دے تو اس کی بخشش کر دی جائے گی۔ (الکامل فی ضعفاء الرجال لابن عدی، الرقم۱۲۸۹۔عمرو بن خالد، ج۶، ص۲۲۳)

سوال: کیا خالی قینچی چلانے سے لڑائی ہوتی ہے ؟

جواب: اسلام میں بدشگونی نہیں ہے ، قینچی چلانے سے لڑائی ہوتی ہو اس میں کوئی حقیقت نہیں ،البتہ بغیرضرورت کے قینچی نہ چلائی جائے کہ ہرکام کا حساب ہے ۔

سوال : ایمان کی حفاظت کیسے ہو،کوئی وظیفہ بھی بتادیں ؟

جواب: ہرایک کواپنے ایمان کی فکرکرنی چاہئے،اللہ پاک کی خفیہ تدبیرسے ڈرتے رہنا چاہئے ،ایمان کی حفاظت کے لیے بُرے دوستوں کی صحبت سےبچئے، عاشقانِ رسول علمائے کرام کا لٹریچر پڑھئے ،مکتبۃ المدینہ کی کتب کا مطالعہ کیجئے ،مثلاً کتاب’’کفریہ کلمات کے بارے میں سوال جواب“ کا مطالعہ کیا جائے، اِنْ شاۤء اللہُ الْکریم ایمان کی حفاظت کامزیدذہن بنے گا ،ایمان کی حفاظت کے لیے رات کو اوراد وظائف پڑھنے کے بعد آخر میں سورۂ کافرون پڑھ لی جائے،اگراس کے بعدبھی گفتگوکرلے تو پھرسورہ ٔکافرون پڑھے یعنی سونے سے پہلے آخری کام یہی ہو۔(جو کوئی صبح 41بار یَا حَیُّ یَا قَیُّومُ لَاۤ اِلٰہَ اِلَّاۤ اَنْتَ پڑھے،اُس کا دل زندہ رہے گا اور ایمان پر خاتمہ ہوگا۔

توجہ فرمائیں:آدھی رات ڈھلے سے سورج کی پہلی کرن چمکنے تک"صبح" ہے۔اس سارے وقفے میں جو کچھ پڑھا جائے،اُسے صبح میں پڑھنا کہیں گے۔

سوال : مدنی مذاکرے کا کیا معنی ٰ ہے ؟

جواب : یادرکھنے کے لیے آپس کی گفتگو اورسوال جواب کو مذاکرہ کہتے ہیں ،لفظ "مدنی" ہماری پہچان ہے ۔

سوال: کیا آپ نے کبھی مشاعرے(شعراء کا ایک جگہ جمع ہوکر شعر خوانی کرنا) میں بھی حصہ لیاہے ؟

جواب:میں نے دعوتِ اسلامی کے آغاز سے پہلے گجراتی مشاعرے میں حصہ لیا ہے ،گجراتی زبان میں نعتیہ یا منقبت کے اشعارلکھے تھے، البتہ کبھی اردو مشاعرے میں حصہ نہیں لیا ۔

سوال: اِس ہفتے کارِسالہ ” دو گُدڑیوں والا “ پڑھنے یاسُننے والوں کو امیرِاہلِ ِسُنّت نے کیا دُعا دی ؟

جواب: یا اللہ پاک ! جو کوئی 21 صفحات کا رسالہ ”دو گُدڑیوں والا“ پڑھ یا سن لے اُسے ہمیشہ نیکیاں کرنے، نیکیاں کروانے، گناہوں سے بچنے اور دوسروں کو بچانے کی سعادت عطا فرماکر بے حساب مغفرت سے نواز دے۔ اٰمِیْن بِجَاہِ خاتم النَّبیّن صلَّی اللہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم ۔


حضرت ِ ابن عباس رضی اللّٰہ عنہما سے مروی ہے کہ دو عالم کے مالِک و مختار باذنِ پروردگار، مکی مدنی سرکار صَلَّی اللّٰہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم نے ارشاد فرمایا: ”جب تم لوگ جنت کے باغات میں سے گزرو تو میوہ چن لیا کرو‘‘۔ اس پر کسی نے عرض کی: جنت کے باغات کیا ہیں؟ تو آپ صَلَّی اللّٰہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم نے ارشاد فرمایا:’’علم کی مجلسیں ‘‘ ۔ (المعجم الکبیر،۱۱/۷۸، حدیث:۱۱۱۵۸)

سرکارِ مدینہ، راحتِ قلب و سینہ صَلَّی اللّٰہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم کا فرمانِ مغفرت نشان ہے: ”جو شخص علم طلب کرتا ہے تو وہ اس کے گزشتہ گناہوں کا کفّارہ ہو جا تا ہے“۔ (تِرمِذی،کتاب العلم،باب فضل طلب العلم،۴/۲۹۵، حدیث:۲۶۵۷)

جو علم کی تلاش میں نکلتاہے وہ واپس لوٹنے تک اللہ عَزَّوَجَلَّ کی راہ میں ہوتا ہے۔(جامع ترمذی، کتاب العلم ، الحدیث۲۶۵۶، ج۴، ص۲۹۴)

عاشقان رسول کی دینی تحریک دعوت اسلامی کے زیر اہتمام ہر ہفتے عالمی مدنی مرکز فیضان مدینہ کراچی میں علمی و فکری نشست ہفتہ وار مدنی مذاکرے کا انعقاد کیا جاتا ہے جس میں عاشقان رسول کی بڑی تعداد شریک ہوکر علم دین سے فیض یاب ہوتی ہے۔

آج رات بمطابق 8 جنوری 2022ء ہفتہ وار مدنی مذاکرے کا انعقاد کیا جائیگا۔ مدنی مذاکرے میں بانی دعوت اسلامی شیخ طریقت، امیر اہلسنت علامہ محمد الیاس عطار قادری دامت بَرَکَاتُہمُ العالیہ مدنی پھول بیان کرنے کے ساتھ ساتھ عاشقان رسول کی جانب سے ہونے والے سوالات کے جوابات بھی ارشاد فرمائیں گے جو کہ مدنی چینل پر براہ راست نشر کیا جائیگا۔

تمام عاشقان رسول سے مدنی مذاکرے میں شریک ہوکر علم دین سیکھنے کی درخواست ہے۔



دعوت اسلامی کے زیر اہتمام ہر ہفتے کی طرح 28 جماد الاولیٰ 1443ھ بمطابق 1 جنوری 2022ء کی شب عالمی مدنی مرکز فیضان مدینہ کراچی میں مدنی مذاکرے کا انعقاد کیا گیا جس میں کثیر تعداد میں عاشقان رسول فیضان مدینہ آکر جبکہ دیگر مقامات بذریعہ مدنی چینل شرکت کی۔

مدنی مذاکرے امیر اہلسنت علامہ محمد الیاس عطار قادری دامت بَرَکَاتُہمُ العالیہ نے علم و حکمت سے بھر پور مدنی پھول بیان فرمائے اور عاشقان رسول کی جانب سے ہونے والے سوالات کے جوابات ارشاد فرمائے۔

مدنی مذاکرے چند مدنی پھول ملاحظہ کیجئے:

سوال : عورتوں کوکیسے کپڑے پہننے چاہئیں؟

جواب : عورتوں کو شریعت کے مطابق ڈِھیلے ڈَھالے کپڑے پہننے چاہئیں۔

سوال: آجکل آپ بیان کم کرتے ہیں، اس کی کیا وجہ ہے ؟

جواب: ایک دوروہ بھی تھا جب میں ایک دن میں کئی بیان کرتاتھا ،ہرنمازکے بعد بیان کی سعادت ملتی تھی ،اب بھی کبھی کبھی بیان کرتاہوں،بچے جوان ہوجائیں تو پھر دکان وہی چلاتے ہیں ،پہلے میں اکیلا ہی بیان کرتا تھا ،اب بیان کرنے والےکافی میرے مدنی بیٹے ہیں ۔

سوال: آپ نے مدنی مذاکرہ یعنی سوال جواب کا سلسلہ کب شروع فرمایا؟

جواب :میراسوال جواب کا اس طرح کا سلسلہ دعوتِ اسلامی کے شروع ہونے سے پہلے بھی ہوتاتھا ۔

سوال: فیضانِ سنت وغیرہ کتابوں سے درس دیا جائے یا موبائل میں موجودPDF وغیرہ سے؟

جواب: جو اُردوپڑھ سکتاہے اوردرس دینے کا اہل ہے تو اس کے لیے کتابوں سے درس دینا بہترہے،موبائل سے بھی درس دیا جاسکتاہے، مساجد، بازاروں، مارکیٹوں اورچوکوں وغیر ہ میں درس دیتے رہیں ، نیکی کی دعوت دینے اورعلم کی اشاعت کے لیے کتابوں سے درس دینے میں آسانی ہے ،بیان میں کچھ مشکل ہے۔

سوال : نیک اعمال پر غوروفکرکا کیافائدہ ہے؟

جواب: آج عیسوی سال کا پہلا دن ہے ،اسلامی بھائی اوراسلامی بہنیں نیک اعمال کا رسالہ دیکھ لیں ،کئی نیک اعمال تو آپ کرتےہی ہوں گے، ہررات نیک اعمال رسالے کوسامنے رکھتے ہوئے ، اپنے اعمال کا جائزہ لیں کہ کون سا عمل ہوااور کون سانہیں ؟یہ نیک اعمال جنت میں لے جانے والے ہیں ،نیت کریں کہ پوراسال ہررات اپنے اعمال کا جائزہ لیں گے ،ان شاء اللہ الکریم اس طرح کرنے سے عمل کا جذبہ ملے گا ،اسلامی بھائیوں کے 72،اسلامی بہنوں کے 63، جامعۃ المدینہ کے طلبہ کے 92 اورطالبات کے لیے 83 نیک اعمال ہیں ۔ان شاء اللہ الکریم یہ سال ’’نیک اعمال ‘‘کا سال بناناہے ۔

سوال : روزانہ نیک اعمال کے مطابق عمل کرکے اپنے اعمال کا جائزہ لینے والے کو امیراہل سنت نے کیا دعادی ؟

جواب : یااللہ پاک! جو کوئی روزانہ نیک اعمال کے مطابق عمل کرکے، اپنےاعمال کا جائزہ لے کر،خانے پُرکرکے ،ہرپہلی تاریخ کو شعبہ اصلاح ِاعمال کے ذمہ دارکو جمع کرواتارہے اورجان بوجھ کر اس میں سستی کرکے کوتاہی نہ کرےتو یا اِلٰہ َالْعَالَمِیْن اس کو 12 مرتبہ حج نصیب فرما،کم ازکم 12 مرتبہ اس کو مدینے کی زیارت نصیب ہواوراس کو مرتے وقت کلمہ نصیب ہوجائے۔ اٰمِیْن بِجَاہِ خاتم النَّبیّن صلَّی اللہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم ۔

سوال: اپنے بچوں اورفیملی کو کون ساوقت دیا جائے ؟

جواب: صلۂ رحمی کی نیت سے بچوں ،فیملی ،ماں باپ،بھائیوں بہنوں کو اچھا اورفریش وقت دیا جائے ،فیملی کے دیگر افراد کووقت دینے کے بارے میں کچھ احتیاطیں بھی ہیں یعنی کہیں بے وقت نہ جایاجائے ، مثلاً کھانے کے وقت کسی کے گھرجانا یا دکان پر گاہگوں کےآنے اوررش کے وقت پہنچ جانادرست نہیں ،گھرمیں اتنا وقت بھی نہ دیں کہ گھروالے تنگ آجائیں ۔ہرچیز کی ایک حد ہونی چاہئے ۔

سوال: اِس ہفتے کارِسالہ ” حضرت آدم علیہ السلام کے بارے میں دلچسپ معلومات “ پڑھنے یاسُننے والوں کو امیرِاہلِ ِسُنّت نے کیا دُعا دی ؟

جواب: یارب المصطفٰے! جو کوئی 17 صفحات کا رسالہ ”حضرت آدم علیہ السلام کے بارے میں دلچسپ معلومات“ پڑھ یا سُن لے اُسے ”فیضانِ حضرت آدم علیہ السلام“سے مالا مال فرما اور ہمیشہ ہمیشہ کے لئے اُس سے راضی ہوجا۔ اٰمِیْن بِجَاہِ خاتم النَّبیّن صلَّی اللہ علیہ واٰلہٖ وسلَّم ۔