20 ذوالحجۃ الحرام, 1441 ہجری

: : :
(PST)

چاررمضان المبارک کو بعدِ عصر اور پانچ رمضان المبارک کی شب مدنی مذاکروں کا انعقاد کیا گیا جن میں امیر اہل سنت حضرت علامہ محمدالیاس عطار قادری دَامَتْ بَرَکَاتُہُمُ الْعَالِیَہ نے عاشقانِ رسول کی جانب سے پوچھے گئے سوالات کے جوابات ارشاد فرمائے۔

مدنی مذاکرے کے چند مدنی پھول ملاحظہ کیجئے:

بعدِ عصر ہونے والا مدنی مذاکرہ

سوال:کیاہرکتاب کا احترام ضروری ہے ؟

جواب: جی ہاں ! ہردِینی کتاب کا احترام ضروری ہے۔

سوال: ہمارےپیارےنبی صلی اللہ علیہ والہ وسلّم کون سے خاندان سے تعلق رکھتے تھے؟

جواب: قبیلہ ٔ قریش کی شاخ بنی ہاشم سے۔

سوال: عبادت سے کیا مرادہے؟

جواب:جوکام اللہپاک کی رِضا کے لیے کیا جائے وہ عبادت ہے ۔

سوال:کوئی ایسا عمل بتادیں جس سے اللہ پاک کی رضا حاصل ہو؟

جواب:ہرنیکی اللہ پاک کی رِضا کےحصول کا ذریعہ ہے ،کون سی نیکی اللہ پاک کی رضا کا باعث ہوگی یہ پوشیدہ ہے ، اللہ پاک نے اپنی رِضا نیکیوں ، ناراضی گناہوں اوراپنے اولیاء کو لوگوں میں پوشیدہ رکھا ہے۔

سوال: ماں باپ کی اطاعت کیسے کرنی چاہئے ؟

جواب:ماں باپ کی اطاعت ایسے کرنی چاہئے جیسےاللہ پاک ا وراس کےپیارے محبوب صلی اللہ علیہ والہ وسلّمنےاطاعت کا حکم دیا ہے ،یہ جاننے کےلیےمکتبۃ المدینہ کا رسالہ ’’سمندری گنبد‘‘کامطالعہ کرلیں ۔

سوال:ذِکرُاللہکرنے میں دل نہ لگے تو کیا کریں؟

جواب: ذِکرُاللہکرتےرہیں تو ایک دن دل میں بھی لگ ہی جائےگا ،بعض نیک کاموں میں دل نہیں لگتا،اس میں دل لگاناپڑتاہے ،تکلف کے ساتھ نیکیاں کرنی پڑتی ہیں، بعض بزرگ فرماتے ہیں ہم نے بیس(20) سال تک اپنے آپ کو بکوشش نیکیوں میں لگایا آخرکارنیکیوں میں دل لگ گیا ،پھر بیس (20) سال اس سے نفع اُٹھایا۔

سوال:پیٹ کی بیماری کاکوئی روحانی علاج ارشادفرمادیں ؟

جواب:فجرکی پہلی رکعت میں سُوْرَۂ فَاتِحہ کے بعد سورۂ اَلَمْ نَشْرَح(پارہ30)اوردوسری رکعت میں سُوْرَۂ فَاتِحہ کے بعد سُورۂ فِیْل(پارہ30) پڑھا لیا کریں ۔اکثراسی طرح سُنّتیں(فجرکے فرضوں سے پہلے کی 2 سُنّتیں)اداکریں البتہ کبھی کبھی دوسری صورتیں بھی پڑھ لیا کریں ، اِنْ شَآءَاللہ پیٹ کے تمام امراض میں شفا حاصل ہوگی ۔اِنْ شَاۤءَ اللہُ الرَّحْمٰن

سوال:افطارکاوقت دعا کی قبولیت کا وقت ہے، اس سے کیامرادہے ؟

جواب:روزہ افطارکرلیا یعنی کھجورکھالی یاپانی پی لیاتو اب قبولیتِ دُعاکاوقت ہے۔

بعدِ تراویح ہونے والا مدنی مذاکرہ

سوال: موجودہ دورمیں بہترین تفسیرِ قرآن کون سی ہے ؟

جواب:تفسیرصِرَاطُ الْجِنَاندورِحاضر(موجودہ دور)کی بہترین تفسیرہے،یہ 10 جلدوں(Volumes) پرمشتمل ہے، اس میں اعلیٰ حضرت امام احمدرضا خان رحمۃ اللہ علیہ کا ترجمۂ کنزالایمان بھی ہے ۔جوپڑھنانہیں جانتے وہ بھی مکتبۃ المدینہ سے تبرک کی نیت سے خرید لیں ،ان کےبچے،بچوں کی امی اورمہمان پڑھیں گے۔

سوال:سیدھے ہاتھ(Right Hand)سے لینےدینے اورکھانے پینےکی کیااہمیت ہے ؟

جواب: سیدھے ہاتھ سے کھانا پینا ،لینا دینا سُنّت ہے اوراُلٹے ہاتھ (Left Hand)سےکھانا پینا،لینا دینا توشیطان کا کام ہے ، اللہ پاک ہمیں شیطانی کاموں سے بچائے ،محدثِ اعظم پاکستان مولانا سرداراحمدقادری چشتی رحمۃ اللہ علیہ فرماتے کہ:" دُنیا میں سیدھے ہاتھ(Right Hand) سےلینے دینےکی عادت بنائیے بروزِقیامت جب نامۂ اعمال دئیے جائیں گےتو اِنْ شَآءَاللہ اسے لینےکے لیے سیدھا ہاتھ(Right Hand) ہی اُٹھے گا"۔

سوال:ٹینشن(Tension) کیسےدُورہو؟

جواب:اپنےآپ کومصروف کرلیں،دین ودنیا کےکاموں میں لگ جائیں۔بے جا دنیا کی فکریں ٹینشن (Tension)کے اضافے کا باعث ہیں ۔اللہپاک پر توکل کریں،زیادہ فکریں دُورکریں ،چھوٹی چھوٹی باتوں کوبڑانہ بنائیں،بعض اوقات ٹینشن(Tension) کا باربار ذکرکرنےسے بھی یہ زیادہ بڑھ جاتی ہے،اس کے ذکرسے بچیں۔

سوال:غُصّے کوکم کرنے کی دُعا اورحل ارشادفرمائیں ؟

جواب:جب غُصّہ آجائے ،تو خاموش ہوجائیں ،غُصّہ کم نہ ہوتو وضو کرلیں ،جس جگہ یا جس شخص پرغُصّہ آئے،اس جگہ یا اس شخص کے سامنے سے ہٹ جائیں،مکتبۃ المدینہ کےرِسالے’’غُصّے کاعلاج‘‘کا مطالعہ کریں ۔

سوال:کیا دعوتِ اسلامی کے آغازسے پہلے بھی آپ کو نعت خوانی کی محفلوں میں شرکت کا شوق تھا ؟

جواب:جی ہاں !دعوتِ اسلامی کے آغازسے پہلےبھی نعت خوانی سے بہت محبت تھی ،جامع مسجدآرام باغ (کراچی)میں نمازِجمعہ کےبعدنعت خوانی ہوتی تھی، اس میں دوستوں کےساتھ شرکت کرتاہے،نعت خواں بہت پیاراپیاراکلام پڑھاکرتے تھے ،مارٹن کواٹرکی سالانہ نعت خوانی جوکہ مشہورنعت خوان حضرت سید ریاض الدین سہروردی صاحب کرواتے تھے، اس میں پاکستان بھرکےنعت خواں آتے تھے ،اس محفل کاتوگویاساراسال انتظاررہتاتھا ۔

سوال:نعمت ملے تو شکراداکرنےکابہترین وقت کون ساہے؟

جواب:جیسےہی نعمت ملے، وہی وقت اس کے شکرکا ہے،اسی طرح جیسے ہی کوئی احسان یا بھلائی کرے تو فوراًاس کاشکریہ اداکیاجائے (یعنی جَزَاکَ اللہ کہا جائے)

سوال:نیکی کاکیا معنیٰ ہے ؟

جواب:نیکی وہ بھلائی اورخیرہے جس کوکرنے کا مقصداللہپاک کی رِضا ہو۔

سوال: اعلیٰ حضرت امام احمدرضا خان رحمۃا للہ علیہ کےداداجان کا کیانام تھا؟

جواب:حضرت مولانا رضا علی خانرحمۃ اللہ علیہ ۔

سوال:موت کےوقت سب سےپہلے روح بدن کے کس حصے سے نکلنا شروع ہوتی ہے؟

جواب:پاؤں کے انگوٹھے سے۔

سوال:آپ کےمجموعہ کلام ’’وسائل بخشش‘‘ میں 277کلام ہیں،ان کےبارے میں کچھ بتائیے ؟

جواب:کلام لکھنے کاشوق تھا ،تھوڑاتھوڑاکرکے لکھتارہا ،کوئی نعت سُنی اورکیفیت بنی تو اسی بحرپر کلام لکھ دیا،کسی نے فرمائش کی اورذہن بن گیا تو لکھ دیا ۔ کلام لکھنے میں بہت وقت لگتاہے،اب تصنیفی کام (کتابیں لکھنے)کی مصروفیت کی وجہ سے کلام لکھناکم کردیا ہے ۔

سوال:واقعۂ فِیْل کب پیش آیا ؟

جواب:نبی ِکریم صلی اللہ علیہ وسلم کی ولادت سے پچپن(55)دن پہلے واقعۂ فِیْلپیش آیا ۔(اس واقعے کی تفصیلی معلومات جاننے کے لیے تفسیر صراط الجنان جلد10 کا مطالعہ کیجئے)

سوال:گھڑی(Watch) کی ایجاد کب ہوئی ؟

جواب:گھڑی کاایجاد کرنے والا خلیفہ ہارونُ الرشیدکےزمانےکاایک مردبتایاجاتاہے ۔

سوال: چلنے کا اندازکیساہوناچاہئے ؟

جواب:جب کوئی مسئلہ نہ ہوتونظرنیچی کرکےچلاجائے ۔گھرمیں اس طرح عملی مشق(Practical) کریں کہ انگوٹھوں پر نظررکھ کرچلیں تاکہ باہر بھی اس کی عادت ہوسکے۔جب جب موقع ملےتونگاہیں نیچی رکھی جائیں ۔چلنے کی15 سُنتیں اورآداب جاننے کے لیےمکتبۃ المدینہ کارسالہ’’163مدنی پھول‘‘ کامطالعہ کریں ۔

سوال: روزے میں پیاس سے بچنے کے کچھ روحانی وظائف بتادیجئے اورکیاکھائیں یہ بھی بتادیں ؟

جواب:{1}بعدِ نمازِ فجر اَعُوذُاوربِسمِ اللّٰہ کے ساتھ صرف ایک بارسُوْرَۃُ الْکَوْثَر(پارہ30)پڑھ کر ہاتھوں پر دم کر کے چہرے پر پھیر لیجئے ، روزے کی حالت میں اِنْ شَآءَاللہ پیاس کی شدّت سے حفاظت ہو گی۔{2}یَامَجِیْدُگرمیوں میں وقتا ً فوقتاً پڑھتے رہئے اِنْ شَآءَاللہپیاس سے اَمْن ملے گا۔  {3} یَامَاجِدُ10بار پڑھ کر’’لیموپانی‘‘وغیرہ پر دم کرکے گرمی کے موسِم میں پئیں،اِنْ شَآءَاللہ بیماری سے حفاظت ہو گی٭سحری کھا کر ایک کھجورچبایئے اورساتھ ہی پانی کا ایک گُھونٹ منہ میں بھر لیجئے،دونوں کو اچھی طرح ہِلاجُلاکر(Mix کر کے)  نگل لیجئے۔اِسی طریقے پر ایک ایک کر کے3 کھجوریں کھایئے،اِنْ شَآءَاللہ روزے میں سارا دنپیاس کی شدّت سے حفاظت ہو گی۔